گردوں کی بیماری کی وجوہات کونسی ہیں؟

گردوں کی بیماری کی وجوہات کونسی ہیں!

پاکستان سمیت دنیا بھر میں گردوں کے بیماری میں اضافہ ہوتا جا رہا ہے،   خاص طور پر اس بیماری کی شرح نوجوانوں میں تشویشناک ناک حد تک جا چکی ہے۔

انسان کے جسم میں دو گردے پائے جاتے ہیں، ہر ایک کا وزن 160 گرام ہوتا ہے۔

گردوں کا کام ٹاکسنز کے خون کا صاف کرنا اور ضایع شدہ معدہ کا پیشاب مین تبدیل کرنا ہوتا ہے۔

ایک گردہ ایک دن میں ڈیڑھ لیٹر تک پیشاب بناتا ہے جب کے دو گردے مل کر  24 گھنٹوں میں 200 لیٹر تک کا فلڈ فلٹر کر سکتے ہیں۔

اسکے ساتھ ساتھ گردوں کا کام ایسڈ بیس بیلنس کو کنٹرول کرنا

پانی کا مقدار کنٹرول کرنا

الیکٹرولائیڈز کو کنٹرول کرنا

جسم سے ٹاکسنز اور ضایع شدہ معدوں کو نکالنا

بلڈ پریشر کو کنٹرول کرنا

اور وٹامن ڈی کو ایکٹیویٹ کرنا وغیرہ ہے۔

گردوں کا کام نہ کرنا کسی بھی انسان کی موت کا سبب بن جاتا ہے۔

ماہرین صحت نے ایسی پانچ وجوہات بتائیں ہیں کے جن سے گردوں کے بیماریاں لاحق ہو سکتی ہیں اور انکو ترک کرکے گردوں کی بیماریوں سے بچا جا سکتا ہے۔

نمبر01 :ٹوائیلٹ جانے میں تاخیر

پیشاب کو زیادہ دیر تک مثانے میں رکھنا  بیکٹیریا کو تیزی سے بڑھانے کا سبب بنتا ہے،   پیشاب جب یوریٹر اور گردوں کی طرف لوٹتا ہے تو زہریلے مادے گردوں کے انفیکشن،  پیشاب کی نالی کے انفیکشن اور ورم گردے یہاں تک کے یوریمیا کا سبب بن جاتا ہے،  اس لئے بہتر ہے کے جب بھی فطرت بلائے تو جتنی جلدی ممکن ہو ٹائلیٹ جانا چاہیئے۔

نمبر02 :نمک کی وافر مقدار میں استعمال

نمک کا زیادہ استعمال بھی گردوں کی بیماری کا سبب بن سکتا ہے اس لئے انسان کو ہر روز 5.8 گرام سے زیادہ نمک ہرگز استعمال نہیں کرنا چاہئے۔

نمبر03: بہت زیادہ گوشت کھانا

گوشت میں پروٹین کا مقدار زیادہ پایا جاتا ہے اور پروٹین ھاضمہ امونیا پیدا کرتا ہے  یے ایک ایسا زہر ہے جو گردوں کے لئے تباہ کن ہے، گوشت کا زیادہ استعمال گردوں کو زیادہ نقصان پھچانے کے برابر ہے۔

نمبر 04  :کیفین کا زیادہ مقدار استعمال کرنا

کیفین ایک ایسی دوا ہے جو آپکے  دماغ اور اعصابی نظام کی چشتی کے لئے لی جاتی ہے۔ اور کیفین چائے، کافے سافٹ ڈرنکس اور انرجی ڈرنکس میں پائی جاتی ہے۔

کیفین کا زیادہ استعمال آپکے بلڈ پریشر کو بڑھاتے ہے اور آپکے گردوں کو تکلیف دیتا ہے، اس لئے کیفین ملی کولڈ ڈرنگس کا استعمال کم سے کم کرنا چاہیئے۔

نمبر 05: پانی کا کم استعمال کرنا

سب سے اہم اور خطرناک بات پانی کا استعمال کم کرنا ہے، گردوں کو اپنا کام اچھے سے کرتے رہنے کے لئے انہیں ہائڈریٹ کرنا ضروری ہوتا ہے اور اسکے لئے زیادہ مقدار میں پانی پینے بہت ضروری ہے،  ماہرین صحت کا کہنا ہے کے گردوں کی بیماریوں سے بچنے کے لئے روزانا کم سے کم 10 گلاس سے زیادہ پانی پینا چاہئے۔

 

You might also like

Leave A Reply

Your email address will not be published.