کراچی: شارع فیصل پر رکشہ میں سوار لڑکی کو ہراساں کرنے والا ایک نوجوان گرفتار ،دیگر کی تلاش جاری

کراچی کے علاقے شارع فیصل پر اوباش نوجوانوں  نے  لڑکی کو ہراساں کرنے کی کوشش کی  ۔۔رکشے میں سوار لڑکی نے واقعہ کی وڈیو بنا کر سوشل میڈیا پر وائرل کر دی ۔۔سوشل  میڈیا پر مبینہ ہراسگی واقعے کی وڈیو وائرل ہونے کے بعد ڈسٹرکٹ ایسٹ پولیس نےکامیاب کارروائی کرکے  واقعے میں ملوث ایک ملزم  کو گرفتار کرلیا۔۔ ایس ایس پی ایسٹ ساجد سدوزئی  نے بتایا کہ 21 سالہ حمزہ شاہراہ فیصل کراچی کا رہائشی ہے ۔۔ ملزم نے اپنے دیگر ساتھیوں کے ہمراہ شارع فیصل پر رکشے میں بیٹھی خاتون کا پیچھا کیا ۔۔ ویڈو بنانے پر ایک لڑکا رکشہ سوار لڑکی کو دھمکیاں بھی دیتا  رہا ۔۔ متاثرہ لڑکی کا کہنا تھا کہ موٹرسائیکلوں پر پر سوار لڑکے شارع فیصل پر رکشہ کا مسلسل پیچھا کرتے رہے،  اوباش نوجوان مجھے دیکھ کر سیٹی بجاتے، ہنستے اور اشارے کرتے ۔۔لڑکی نے مزید بتایا کہ تنگ آکر ویڈیو بنانا شروع کی تو لڑکے بھاگ گئے۔۔ کچھ دیر بعد لڑکے دوبارہ واپس آئے اور چلتے رکشہ کو لاتے مارتے رہے۔۔موٹرسائیکل پر سوار لڑکوں نے رکشہ کو زبردستی روکنے کی کوشش کی۔۔ویڈیو میں نظر آنے والا لڑکا بولتا رہا ویڈیو کیوں بنائی رکشہ روک لو ۔۔متاثرہ  لڑکی کا کہنا تھا کہ ڈرائیو نے ڈرگ روڈ پر ٹریفک چوکی کے قریب رکشہ روکا تو تمام لڑکے بھاگ گئے۔۔ ویڈیو میں نظر آنے والے کسی بھی لڑکے نے ہیلمٹ تک نہیں پہن رکھا تھا ۔۔شارع فیصل پر ہیلمٹ نہیں تو سفر نہیں مہم کے تحت بھی لڑکوں کو نہیں روکا گیا ۔۔

You might also like

Leave A Reply

Your email address will not be published.