سفر کے دوران طبیعت کی خرابی سے کیسے بچا جا سکتا ہے؟

گاڑی کا سفر نہ صرف طویل ہوتا ہے بلکہ تھکن کے ساتھ ساتھ سر چکرانے اور جی متلانے جیسی شکایات کا بھی سامنا کرنا پڑتا ہے۔

اکثر لوگوں کو گاڑی میں یا بحری سفر کے دوران موشن سکنس کا مسئلہ رہتا ہے یعنی چکر آنا اور قے کی کیفیت محسوس ہونا۔

موشن سکنس کی علامات مختلف بھی ہو سکتی ہیں۔ جیسے کچھ کو پسینہ آتا ہے یا پھر پیٹ میں درد ہوتا ہے، جی متلاتا ہے اور مسلسل بے آرامی تو رہتی ہی ہے۔

ان تمام علامات کے باعث سفر کرنا انتہائی مشکل اور خوفناک عمل ہو سکتا ہے لیکن کچھ طریقے اپنا کر اس تکلیف کو کم کیا جا سکتا ہے۔

کسی بھی روڈ ٹرپ پر جانے سے پہلے کوشش کریں کہ کچھ زیادہ نہ کھائیں پیئں۔ زیادہ کھانے سے معدے پر بوجھ پڑتا ہے اور متلی کی کیفیت زیادہ محسوس ہوتی ہے۔

مشروبات بھی جی متلانے اور قے کی وجہ بن سکتے ہیں۔ بلکہ الکوحل سے تو جسم میں پانی کی کمی ہو جاتی ہے جس سے سر میں بھی درد ہوتا ہے۔

سر کا درد اگر شدید ہو جائے تو دل بھی خراب ہوتا ہے اور قے کی کیفیت محسوس ہوتی ہے۔

بہت تیز خوشبو والے سپرے بھی موشن سکنس کا باعث بن جاتے ہیں۔ اس لیے ضروری ہے کہ کسی ایسے سپرے کا انتخاب کریں جو سفر کے دوران  بے آرامی کا سبب نہ بنے۔

جن افراد کو موشن سکنس کا مسئلہ رہتا ہے انہیں چاہیے کہ وہ ڈرائیور کے ساتھ فرنٹ سیٹ پر بیٹھیں۔ پیچھے بیٹھنا اور بالخصوص بیچ والی سیٹ پر بیٹھنے سے کافی پریشانی ہو سکتی ہے۔

سفر کے دوران کچھ دیر سو جانے سے موشن سکنس سے بچا جا سکتا ہے کیونکہ یہ ایک ایسی کیفیت ہے کہ گاڑی میں زیادہ حرکت محسوس کرنے یا تیز خوشبو سے بھی متحرک ہو سکتی ہے۔

چیونگم یا ببل گم چبانے سے بھی موشن سکنس کی شدت کم ہو سکتی ہے۔ چیونگم چبانے سے کچھ ایسے کیمیکل ریلیز ہوتے ہیں جن سے آپ کی توجہ دوسری طرف ہو جاتی ہے۔

گاڑی کے سفر کے دوران موشن سکنس سے بچنے کے لیے موسیقی سننا بھی فائدہ مند ثابت ہو سکتا ہے۔ ویسے بھی موسیقی سنتے ہوئے ایسے ہارمونز ریلیز ہوتے ہیں کہ آپ کو اچھا اچھا محسوس ہوتا ہے۔

اپنی توجہ ادھر ادھر کرنے کے لیے ضروری ہے کہ سفر کے دوران اپنا دماغ گپ شپ میں مصروف رکھیں۔ اور اگر اکیلے سفر کر رہے ہیں تو کسی دوست کو فون کرلیں۔

You might also like

Leave A Reply

Your email address will not be published.